تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیل بھی ضروری...... حسین اختر

Beed

 تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیل بھی ضروری...... حسین اختر

            بیڑ (نامہ ِ نگار) بتاریخ: 4جنوری2022  کو  ملیہ بوائز پرائمری اسکول کی طالبہ شیخ رُخسار شیخ عبد القدیر معلم جماعت چہار م نے کراٹے مقابلوں میں میڈل حاصل کر کے اِسکول کے نام کو درفشاں کیا ہے۔ اِس ضمن میں ایک ملیہ بوائز پرائمری میں ایک اسقالیہ پروگرام کا انعقاد کیا گیا اور اِس ہو نہار طالبہ کی حوصلہ افزائی کی گئی۔ اِس پروگرا م کی صدارت ملیہ بوائز ہائی اِسکول وجونیئر کالج کے پرنسپل جناب سید عبد الستار صاحب نے فرمائی۔ بطورِ مہمانِ خصوصی موظف صدر مدرس ملیہ ہائی اسکول دھارور جناب خواجہ نور الثقلین انصاری اور صدر تنظیم ترقی اُردو جناب سید حسین اختر پروگرام میں موجود تھے۔

            اِس موقع پر حسین اختر نے اپنی تقریر میں کہا کہ تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیل کی بھی اپنی اہمیت وافادیت ہے اور اِس میدان میں بھی ترقی کے مواقع موجود ہیں۔ لہذا کھیل کو بھی فراموش نہیں کیا جاسکتا۔ پروگرام کے صدر جناب ستار سر نے اس موقع پر کہا کہ طلباء طالبات کی تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیل کود کی سرگرمیوں کو دیکھ کر اُنھیں مسرت کا احساس ہوا ہے اور قوم وملت کے بچے اور بچیاں ہر فیلڈ میں ترقی کررہے ہیں یہ دیکھ کر خوشی ہوتی ہے۔اِس موقع پر مہمانِ خصوصی خواجہ نوالثقلین نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا اور اِس ہونہار طالبہ کو مبارکباد پیش کی۔

            اس تقریب میں اسکول ہذا کے صدر مدرس شیر خان صاحب، خلیل سر، عمران سر، غفار سر موجود تھے۔ اِس پروگرام کی نظامت  فرح یاسمین نے کی۔ سورۂ فاتحہ کی شروعات سمیہ باجی نے کی۔ آخر میں شکریہ کے کلمائے صدیقی نُز ہت تمیکن نے ادا کیے۔