جمعیۃ علماء مہا راشٹر کی مجلس عاملہ و مدعوئین خصوصی کا اجلاس

National

جمعیۃ علماء مہا راشٹر کی مجلس عاملہ و مدعوئین خصوصی کا اجلاس

مولانا محمد ذاکر قاسمی( ناظم اعلی) مفتی حذیفہ قاسمی( ناظم تنظیم) مفتی روشن قاسمی ( سکریٹری ودربھہ) مولانا ابراہیم قاسمی (  (سکریٹری مغربی مہا راشٹر ) ایڈوکیٹ پٹھان تہورخان ( سکریٹری لیگل سیل ) ایڈوکیٹ ماجد پٹیل ( سکریٹری وقف سیل ) قاری شمس الحق قاسمی ( سکریٹری اصلاح معاشرہ  )مولانا اعجاز پنہالکر ( سکریٹری کوکن) منتخب

جمعیۃ علماء سے وابستہ ہوکر اسے مضبوط و مستحکم کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔ مولانا ندیم صدیقی  

ممبئی۔3؍ اکتوبر  (پریس ریلیز) آج یہاں انجمن اسلا م سی ایس ٹی ممبئی کے اکبر پیر بھائی میٹنگ ہال میںجمعیۃ علماء مہا راشٹر کی مجلس عاملہ اورمدعو ئین خصوصی کا ایک اہم اجلاس  بصدارت مولانا حافظ محمدندیم صدیقی( صدر جمعیۃ علماء مہا راشٹر ) منعقد ہوا،جس میں صو بے بھر کے تمام اراکین عاملہ اور مد عوئین خصوصی نے شرکت کی۔اس اجلاس میں مشہور علماء و اسلامی اسکالر س کی گرفتاری ودیگر محروسین کے مقدمات ،شولا پور میںجمعیۃ یوتھ کلب بھارت اسکائوٹ اینڈ گائڈ کی ٹریننگ ،جمعیۃ اوپن اسکول کے ذریعہ مدارس کے اساتذہ کی ٹریننگ،جلسہ اصلاح معاشرہ و سیرۃ النبی ﷺ کے انعقاد پر غورو خوض کرکے اتفاق رائے سے یہ طے کیا گیا کہ مشہورعالم دین مولانا کلیم صدیقی صاحب کے مقدمہ کی پیروی میں جمعیۃ علماء مہا راشٹر کی لیگل ٹیم تیزی لائے اور عدالت میں مضبوط طریقے پر پیروی کرے اور ان کی جلد رہائی کے لئے موثر اقدامات کرے ۔

ماہ نومبر کے پہلے ہفتہ میں شولا پور میں منعقد ہونے والے جمعیۃ یوتھ کلب بھارت اسکائوٹ اینڈ گائڈ کی ٹریننگ کے سلسلہ میں تبادلہ خیال کیا گیا اور تمام ضلع ذمہ داروں سے شرکت کرنے والے نوجوانوں کی فہرست ۲؍ دن کے اندر صوبائی دفتربھیجنے کی اپیل کی گئی،اس ٹریننگ کیمپ میں ہر ضلع سے چار ایسے نوجوانوں کو شرکت کی منظوری دی جائے گی جو ہائی اسکول پاس ہوں ، عالم دین یا حافظ ہوں ،صحت و تندرست ہوں ،دینی مزاج کے حامل ہوں ،جمعیۃ علماء سے وابستہ ہوں یا اس کی پالیسی سے اتفاق رکھتے ہوں ان کی عمر ۲۱ ؍ سال یا اس سے زائد ہو ،فہرست بھیجنے کی آخری تاریخ ۵ ؍ اکتوبر طے کی گئی ہے ۔اجلاس میں تمام اراکین کے باہم مشوروں سے جدید تعلیمی پالیسی کے شرسے مدارس اسلامیہ کو بچانے اورمدارس کے طلباء کوعصری تعلیم سےوابستہ کرنے کے لئے جمعیۃ اوپن اسکول کے ذریعہ اساتذہ کی ٹریننگ کا دوسرا بیچ اعظم کیمپس پونہ میں ۱۱؍ نو مبر سے شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا جس میں صوبہ مہا راشٹر میں واقع تمام مدارس سے ایک ایک استاذ کی فہرست طلب کی گئی ہے اور صوبائی دفتر جمعیۃ علماء مہا راشٹر میںلسٹ بھیجنے کی آخری تاریخ ۱۰؍ اکتوبر مقرر کی گئی ہے۔

اجلاس میں نوجوان طبقہ کو بے راہ روی کا شکار ہونے سے بچانے،سماجی اور معاشرتی گناہوں دور رکھنے، خاص کر مسلم لڑکیاں جو معاشقہ، مجبوری ، یاپھر سازش کا شکار ہو کر غیروں کے ساتھ رشتہ بنا لے رہی ہیں اور اس جیسی دیگر منکرات کے سد با ب کے لئے جمعیۃ علماء مہا راشٹر کی نگرانی میں صوبے بھر میں اصلاح معاشرہ کو تحریک بناکرکام کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔اس موقع پر تمام اراکین عاملہ کے اتفاق رائے سے جمعیۃ علماء مہا راشٹر کے ناظم اعلی و دیگر نظماء کا انتخاب عمل میں آیا چنانچہ حسب سابق مولانا محمد ذاکر قاسمی صاحب ( جنرل سکریٹر ی جمعیۃ علماء مہا راشٹر) مفتی سید محمدحذیفہ قاسمی ( ناظم تنظیم جمعیۃ علماء مہا راشٹر )  جناب ایڈوکیٹ پٹھان تہورخان ( سکریٹری لیگل سیل جمعیۃ علماء مہا راشٹر) جناب ایڈوکیٹ ماجد پٹیل ( سکریٹری وقف سیل جمعیۃ علماء مہا راشٹر) مولانا محمد ابراہیم قاسمی شولاپور ( سکریٹری مغربی مہا رشٹر زون ) مفتی محمد روشن شاہ قاسمی ( سکریٹری وربھہ زون)مولانا اعجاز پنہالکر ( سکریٹری کوکن زون) قاری شمس الحق قاسمی ( سکریٹری اصلاح معاشرہ و سیرۃ النبی ) منتخب کئے گئے ۔

 صدر اجلاس مولانا حافظ محمدندیم صدیقی( صدر جمعیۃ علماء مہا راشٹر ) نے جمعیۃ علماء مہا راشٹر کے جانب سے عدالتوں میں لڑے جانے والے مقدمات کی نوعیت ،ملک کے موجودہ حالات میں جمعیۃ اوپن اسکول کی اہمیت و ضرورت ،مسلم سماج سے جہیز و جوڑے کی رقم ،بچت گڑھ کے نقصانات و کوکن سیلاب متاثرین کی باز آبادکاری و دیگر امور پر پر روشنی ڈالتے ہوئے فر ما یا کہ موجودہ حالات سے نمٹنے کے لئے جمعیۃ علماء سے وابستہ ہوکر اسے مضبوط و مستحکم کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے ۔اجلاس کا آغاز قاری شمس الحق قاسمی صاحب جنرل سکریٹری جمعیۃ علماء مراہٹواڑہ کی تلاوت اور قاری سعد بن اسلم صدر جمعیۃ علماء تعلقہ ماجل گائوں بیڑ کے نعتیہ کلام سے ہوا ۔
 اس اجلاس میں جمعیۃ علماء مہا راشٹر کےصوبائی صدر و نو منتخب تمام عہدیداران سمیت جملہ اراکین عاملہ و مدعوئین خصو صی مو لانا حبیب الرحمن قاسمی اودگیر ،قاری محمد ایوب ملاڈ ممبئی ، مفتی رفیق پورکر(مہاڈ)مولا معز الدین ندوی ، عبد الروف انجینراورنگ آباد ، ،مفتی شاہد پونہ ،مولانا سراج احمد قاسمی ناگپور ،حافظ عتیق ثانی کامٹی،مولانا ارشاد اللہ مخدومی ( احمد نگر ) مولانا عثمان فیصل قاسمی ( ناندیڑ) عبد الاحد اسعدی ( دھولیہ)مولانا آصف شعبان ،قاری اخلاق جمالی( مالیگائوں) مفتی صادق پٹیل ( سانگلی )مولانا عبد الجلیل ملی ،مولانا صادق ندوی( پر بھنی) مفتی عبد اللہ ،مولانا صابر( بیڑ)مولانا عبد الروف ( کولھاپور)مفتی عبد الرحمن ( جالنہ) مولانا عمران ( عثمان آباد ) مولانا ریحان( امراوتی )مولانا راشد قاسمی پالنپوری ،یونس بھائی دکا،مولاناوہاج اطہر قاسمی ،مولانا صغیر نظامی ،مولانا اسعد قاسمی ،مولانا الیاس رسولپوری ( ممبئی ) عبد الحسیب نداف ( شولاپور) مولانا قاضی حسین فلاحی ( رائے گڑھ)شرف عالم بابا ( نیو ممبئی) مفتی توفیق (رتناگیری )مولانا زکریا رحمانی ( نندوربار) جناب ایڈوکیٹ عشرت علی خان و دیگر شریک تھے ۔