ایس بی آئی برانچ منیجر نے خود لیا اور اپنے ملازمین کو بھی دلایا ویکسین کی دوسری خوراک

National

ایس بی آئی برانچ منیجر نے خود لیا اور اپنے ملازمین کو بھی دلایا ویکسین کی دوسری خوراک

 کورونا سے مستقل راحت کے لیے ویکسین کی دونوں خوراکیں ضروری ہیں

لکھی سرائے، 07 ستمبر: کورونا وائرس کو مکمل طور پر ختم کرنے اور لوگوں کو اس وبا سے مستقل راحت فراہم کرنے کے لیے ضلع میں مسلسل ویکسینیشن اور جانچ کی مہم جاری ہے۔ اس سلسلے میں منگل کو لکھی سرائے پی ایچ سی میں خصوصی ویکسینیشن مہم کے دوران ویکسینیشن کیمپ کا اہتمام کیا گیا۔ جس میں لکھی سرائے ایس بی آئی برانچ کے منیجر پرفل کمار جھا نے پروٹوکول کے مطابق مقررہ وقت پر ویکسین کی دوسری خوراک لی اور اپنی موجودگی میں اپنے بینک ملازمین کو بھی دوسری خوراک دلائی۔ اسی کے ساتھ دوسرے لوگوں سے بھی اپیل کی کہ وہ اس وبا کو ختم کرنے کے لئے ویکسین لیں۔

 

 ویکسین کی دونوں خوراکیں ضروری ہیں:ویکسین کی دوسری خوراک لینے کے بعد برانچ منیجر نے کہا ''کوویڈ انفیکشن سے مستقل راحت کے لیے مکمل یعنی ویکسین کی دونوں خوراکیں بہت اہم ہیں۔ کیونکہ ہم ایک خوراک سے اس وبا سے مستقل راحت نہیں پا سکتے۔ لہٰذا، میں تمام لوگوں سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ ویکسین کی دونوں خوراکیں لیں۔ اس کے ضمنی اثرات جیسے ہلکا بخار، جسم میں درد، تھکاوٹ وغیرہ ویکسین لینے کے بعد ہو سکتا ہے۔ جیسا کہ دوسری ویکسینوں کا ہوتا ہے۔ اس لئے میں ضلع کے لوگوں سے اپیل کرتا ہوں کہ جب اس طرح کے اثرات ہوں تو گھبرائیں نہیں،بلکہ بلا خوف ویکسین لیں۔ یہ معاشرے کے ہر طبقے کی ذمہ داری ہے۔ ویکسین نہ صرف مکمل طور پر محفوظ ہے۔ بلکہ یہ کافی موثر بھی ہے۔ لوگوں کو موقع ملتے ہی ویکسین لینی چاہیے۔

 

 مینیجر نے بہتر انتظامات کے لیے پی ایچ سی کی تعریف کی:برانچ منیجر پرفل کمار جھا نے ویکسینیشن کے دوران کیے گئے بہتر انتظامات کے لیے پی ایچ سی مینجمنٹ کو بھی سراہا۔ انہوں نے کہا کہ پی ایچ سی کے تمام افسران اور اہلکار بہت تعاون کرتے ہیں اور ہمیشہ اس بات کا خیال رکھتے ہیں کہ ویکسین لینے والے کسی بھی شخص کو کسی قسم کی تکلیف کا سامنا نہ کرنا پڑے اور تمام لوگ آسانی سے ویکسین حاصل کر سکیں۔ ایک ہی وقت میں، انتھک، نہ رکنے والی مہم چلا کر، وہ لوگوں کو آگاہ بھی کر رہے ہیں اور ویکسین لینے کے لیے تحریک بھی دے رہے ہیں۔ میں بلاک ہیلتھ منیجر نشانت راج سمیت پوری پی ایچ سی انتظامیہ کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔