ایم ڈی اے مہم ریاست کے 22 اضلاع میں چلائی جائے گی تاکہ فلیریا کو ختم کیا جاسکے: منگل پانڈے

National

ایم ڈی اے مہم ریاست کے 22 اضلاع میں چلائی جائے گی تاکہ فلیریا کو ختم کیا جاسکے: منگل پانڈے

 

دوا 20 ستمبر سے کھلائی جائیں گی، مہم کی کامیابی کے لیے تیاریاں شروع

 

دو سال سے کم عمر کے بچوں اور حاملہ خواتین کو دوائیں نہیں دی جائیں گی

پٹنہ، 7 اگست وزیر صحت منگل پانڈے نے بتایا کہ ایم ڈی اے (ماس ڈرگ ایڈمنسٹریشن) مہم ریاست کے 22 اضلاع میں چلائی جائے گی۔ اس میں ارریہ، بانکا، بیگوسرائے، بھاگل پور، بکسر، مشرقی چمپارن، مغربی چمپارن، گوپال گنج، جہان آباد، جموئی، کیمور، کٹیہار، کھگڑیا، مدھے پورہ، مونگیر، مظفر پور، پٹنہ، سہرسہ، ساران، سیتامڑھی، سیوان اور سپول اضلاع شامل ہیں۔ پہلے 14 جون 2021 سے ریاست کے 22 اضلاع میں ایم ڈی اے مہم شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا، لیکن اب کورونا انفیکشن کے پیش نظر یہ مہم 20 ستمبر سے شروع کی جائے گی۔

 

جناب پانڈے نے کہا کہ اس حوالے سے تمام شناخت شدہ اضلاع میں تیاریاں شروع کر دی گئی ہیں۔ مہم کے بارے میں کمیونٹی کو آگاہ کرنے کے لیے آئی ای سی(شتہاری) مواد تیار کیا گیا ہے، جو متعلقہ اضلاع میں تقسیم کیے جائیں گے۔ مہم کے آغاز سے قبل ادویات کی مانگ اور فراہمی کا ایکشن پلان بھی مکمل ہو جائے گا۔ مہم کے بہتر بنانے کے پیش نظر ریاستی، ضلعی اور بلاک سطح پر ٹاسک فورس کے اجلاس منعقد کرنے کے ساتھ ایکشن پلان کا جائزہ بھی لیا جائے گا۔ ایم ڈی اے راؤنڈ کے دوران اس بات کو یقینی بنایا جائے گا کہ اہل افراد کی زیادہ سے زیادہ تعداد کو فلیریا کی دوا دی جائے۔ مہم کے دوران البانڈازول اور ڈی ای سی کی دوائیں لوگوں کو دی جائیں گی۔ 2 سال سے کم عمر کے بچوں، حاملہ خواتین اور سنگین بیماریوں میں مبتلا افراد کو چھوڑ کر تمام لوگوں کو فلیریاکی دوا دی جائے گی۔

 

  وزیر صحت نے کہا کہ فلیریا عالمی سطح پر سنگین بیماریوں کی فہرست میں شامل ہے۔ عالمی سطح پر ہندوستان ان ممالک میں سے ایک ہے جو فلیریا سے سب سے زیادہ متاثر ہیں۔ جبکہ بھارت میں بہار سب سے زیادہ متاثر ہوتا ہے۔ فلیریا کے خاتمے کے لیے ضروری ہے کہ تمام اہل افراد ایم ڈی اے راؤنڈ میں دوا لیں۔ فیلیریاسس والے لوگ میں بعض اوقات ابتدائی مراحل میں کوئی علامتیں ظاہر نہیں ہوتیں یا علامات ظاہر ہونے میں کئی سال لگ سکتے ہیں۔ لہٰذا تمام اہل لوگوں کے لیے دوا لینا بہت ہی ضروری ہے۔ فلیریا کو روکنے کا طریقہ اس کے علاج سے بہت آسان ہے۔ گھر کے گرد گندگی جمع نہ ہونے دیں اور گھروں میں سونے سے پہلے مچھر دانی کا استعمال کریں۔ اس کے ساتھ ساتھ دوسرے لوگوں کو بھی ادویات کے استعمال کے بارے میں آگاہ کریں، تاکہ فلیریا جیسی بیماریوں کو جڑ سے ختم کیا جا سکے۔